ایک طرف مسائل کے انبار تو دوسری طرف نالوں سے نکلنے والے کچرے نے دوہری مصیبت کھڑی کردی

ایک طرف مسائل کے انبار تو دوسری طرف نالوں سے نکلنے والے کچرے نے دوہری مصیبت کھڑی کردی

کراچی میں سڑکوں پر جمع کچرا اور گندگی سے بیماریاں پھیلنے کا خدشہ پیدا ہو گیا شہر قائد میں مختلف امراض تیزی سے جنم لینے لگے، تمام مضافاتی بستیوں اور کچی آبادیوں میں کچرا کنڈیوں سے شدید تعفن اٹھ رہا ہے، طبی ماہرین کے مطابق موجودہ صورتحال شہریوں کیلئے خطرناک ہے، کچرے سے اٹھنے والے تعفن کی وجہ سے سانس کی بیماریاں جنم لے سکتی ہیں،بیشتر علاقوں میں بارش کے پانی کے ساتھ سیوریج کا پانی بھی جمع ہوگی، جس کے نتیجے میں مچھر، مکھیوں اور دیگر حشرت الارض جنم لینا شروع ہوگئے ہیں، شہریوں کے مطابق کراچی میں گزشتہ دو سال سے مچھروں اور مکھیوں کے خاتمے کیلئے سپرے نہیں کیا گیا،،،کچرا کنڈیوں اور نالوں کناروں پر مختلف چھوٹے چھوٹے کیڑے بھی جنم لے رہے ہیں،
شہریوں نے التجا کی ہے کہ حکومت ان پر ترس کھاتے ہوئے مسائل کو حل کرے، کراچی میں ہنگامی بنیادوں پر جراثم کش ادویات اسپرے مہم شروع کی جائے بصورت دیگر کراچی میں کسی بھی وقت وبائی امراض پھوٹ پڑسکتے ہیں۔

Most Popular