دبئی کے تاریخی ڈے نائٹ پنک بال ٹیسٹ کو نائب کپتان اظہرعلی نے ٹرپل سینچری بناکر یاد گار بنا دیا۔

دبئی کے تاریخی ڈے نائٹ پنک بال ٹیسٹ کو نائب کپتان اظہرعلی نے  ٹرپل سینچری بناکر یاد گار بنا دیا۔

ایشیائی سرزمین پر کھیلا جانے والا پہلا ڈے نائٹ پنک بال ٹیسٹ میچ اظہر علی نے اپنی شاندار کارکردگی سے یادگار بنا دیا ہے ۔ قومی ٹیسٹ نائب کپتان نے اپنی اننگز میں کئی ریکارڈ قائم کر دیئے اظہر علی نے چار سو انہتر گیندوں پر تیئیس چوکوں اور دو چھکوں کی مدد سے ناقابل شکست تین سو دو رنز کی تاریخی اننگز کھیلی ۔ وہ یہ اعزاز حاصل کرنے والے دنیا کے انتیس ویں اور پاکستان کے چوتھے بلے باز ہیں ۔ اس سے پہلے حنیف محمد ،انضمام الحق اور یونس خان یہ اعزاز حاصل کرچکے ہیں اظہر علی نے کیرئیر کے پچاس ویں ٹیسٹ میں چار ہزار رنز بھی مکمل کرلیے وہ اس سنگ میل کو عبور کرنے والے دسویں پاکستانی بلے باز ہیں ۔ اظہر علی نے متحدہ عرب امارت کی سرزمین پر سب سے بڑی اننگز کھیلنے کا اعزاز بھی اپنے نام کر لیا اس سے پہلے جنوبی افریقا کے اے بی ڈی ویلیئرز نے پاکستان کے خلاف دو سو اٹہھتر رنز بنائے تھے اظہر علی پاکستان کی جانب سے ٹیسٹ کرکٹ میں چوتھی بڑی اننگز کھیلنے والے بلے باز بھی بن گئے ۔ جبکہ ٹیسٹ میچ کی پہلی اننگز میں کسی بھی پاکستانی اوپنر نے چھبیس سال بعد ڈبل سینچری بنائی ہے ۔اس سے پہلے انیس سو بانوے میں اوپنر عامر سہیل نے انگلیںڈ کے خلاف میچ کی پہلی اننگز میں ڈبل سینچری سکور کی تھی کسی بھی پاکستانی بلے باز نے اٹھاون سال بعد ویسٹ انڈیز کے خلاف ٹرپل سینچری سکور کی ہے ۔انیس سو اٹھاون میں حنیف محمد نے تین سو سینتیس رنز کی تاریخی اننگز کھیلی تھی ۔ ان دو اننگز کے علاوہ آج تک کوئی بھی پاکستانی بلے باز کالی آندھی کے خلاف ڈبل سینچری نہیں سکور کر سکا ہے

Most Popular