معاوضوں کا تنازعہ: آسٹریلین کرکٹرز نے ایشز کے بائیکاٹ کی دھمکی دیدی۔

معاوضوں کا تنازعہ: آسٹریلین کرکٹرز نے ایشز کے بائیکاٹ کی دھمکی دیدی۔

کرکٹ آسٹریلیا اور آسٹریلین کرکٹرز ایسوسی ایشن کے درمیان معاوضے پر جاری تنازع مزید شدت اختیار کر گیا ہے اور بورڈ کی جانب سے دھمکی کے بعد ٹیم کے نائب کپتان ڈیوڈ وارنر نے ایشز سیریز کے بائیکاٹ کی دھمکی دے دی ہے۔کرکٹ آسٹریلیا کی جانب سے اپنے کھلاڑیوں کیلئے ایک نیا ماڈل پیش کیا گیا تھا جس کے مطابق کرکٹ آسٹریلیا کی تجویز کے تحت صرف مرد انٹرنیشنل کھلاڑیوں کے پاس کسی بھی قسم کی سرپلس آمدنی میں حصہ لینے کا موقع ہو گا جبکہ ڈومیسٹک سطح پر کھیلنے والے مرد اور خواتین کھلاڑیوں کو دونوں ڈومیسٹک اور انٹرنیشنل سطح پر مقررہ آمدنی ملے گی اور نفع یا نقصان دونوں ہی صورتوں میں اس پر فرق نہیں پڑے گا۔واضح رہے کہ آسٹریلین کرکٹرز ایسوسی ایشن نے بورڈ حکام کو جاری مذاکرات کی قرارداد کی منظوری کیلئے 30 جون کی ڈیڈلائن دے رکھی ہے جب کھلاڑیوں کا موجودہ پانچ سالہ معاہدہ ختم ہو جائے گا۔کرکٹ آسٹریلیا کے چیف ایگزیکٹو جیمز سدرلینڈ نے دھمکی دی تھی کہ اگر کھلاڑیوں نے معاہدے پر دستخط نہ کیے تو انہیں ملازمت سے ہاتھ دھونے پڑ جائیں گے جس پر کرکٹرز ایسوسی ایشن نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ثالثی کے ذریعے معاملہ حل کرنے کی تجویز پیش ی تھی۔ جیمز سدر لینڈ کے بیان پر برہم ڈیوڈ وارنر نے کہا کہ اگر بورڈ نے معاملہ حل نہ کیا تو اسے رواں سال ہوم ایشز سیریز میں آسٹریلین ٹیم سے محروم ہونا پڑ سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ تمام کھلاڑی متحد کھڑے ہیں اور اگر بورڈ نے معاہدہ نہ کیا تو ہمارے پاس دنیا بھر میں ہونے والی ڈومیسٹک ٹی20 لیگز میں حصہ لے کر کرکٹ کھیلنے اور بہتر رقم کمانے کا موقع موجود ہے لیکن ایسی صورت میں آسٹریلین کرکٹ پورے گرمیچوں کے سیزن میں اپنی ٹیم سے ہو جائے گی۔یاد رہے کہ دنیا بھر میں لیگ کھیلنے کیلئے کھلاڑیوں کو بورڈ سے این او سی درکار ہوتا ہے لیکن بورڈ آسٹریلین کرکٹر سے معاہدہ نہیں کرتا تو کھلاڑی دنیا بھر میں کہیں بھی لیگ کرکٹ کھیلنے کے مجاز ہوں گے۔

Most Popular