نعیم بخاری نے چیف جسٹس پاکستان سے ان کی ایئر ہوسٹس کے ہمراہ تصویر پر اعتراض کردیا۔

Apr 03, 2018 | 15:07

سپریم کورٹ میں ایک کیس کی سماعت کے دوران تحریک انصاف کے رہنما نعیم بخاری نے چیف جسٹس پاکستان سے ان کی ایئر ہوسٹس کے ہمراہ تصویر پر اعتراض کردیا۔ منگل کو سپریم کورٹ کے کمرہ نمبر ایک میں چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نے مختلف مقدمات کی سماعت کی ، ایک مقدمے کی سماعت کے دوران تحریک انصاف کے رہنما اور پاناما کیس میں عمران خان کے وکیل نعیم بخاری نے چیف جسٹس کی سوشل میڈیا پر چلنے والی ایئر ہوسٹسز کے ساتھ تصویر کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ مجھے آپ کی اس تصویر پر اعتراض ہے۔جواب میں چیف جسٹس نے خوشگوار موڈ میں ریمارکس دیئے کہ کیوں آپ تصویر پر جل رہے ہیں، آپ کا تو حق بھی بنتا ہے، نعیم بخاری نے کہا کہ یہ وکلا کا حق مارنے والی بات ہے، جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ بعض اوقات بیٹیوں کو انکار نہیں کیا جاسکتا۔واضح رہے کہ چند روز قبل کراچی سے اسلام آباد روانگی کے وقت دوران پرواز پی آئی اے کی فضائی میزبانوں نے چیف جسٹس کے ہمراہ چند تصاویر کھنچوائی تھیں، بعد میں انہوں نے یہ تصاویر سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کردی تھیں۔

مزیدخبریں