شامی صوبے ادلب میں جنگ بندی نہیں کریں گے،دہشت گردوں کے خلاف لڑائی جاری رہے گی: روسی صدر پیوٹن

Sep 08, 2018 | 09:16

ادلب میں فوجی کارروائی سے متعلق ایران، روس اور ترکی کے صدور نے ایرانی دارالحکومت تہران میں ایک اعلیٰ سطح کے اجلاس میں شرکت کی جس میں ترکی کے صدر نے زور دیا کہ شامی صوبے میں خون ریزی سے بچنے کے لیے جنگ بندی کی جائے،تاہم روسی صدر ولادی میر پوٹن نے کہا ہے کہ روس ادلیب صوبے میں دہشت گردوں کے خلاف جنگ جاری رکھے گا، اجلاس میں روس اور ایران کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ جاری رہنی چاہیے اور شامی صدر بشار الاسد کو حق حاصل ہے کہ وہ شام کا مکمل کنٹرول حاصل کریں، ترک صدرکا کہنا تھا کہ وہ نہیں چاہتے کہ ادلب میں خون ریزی ہو،،،ادلب پر کسی بھی حملے کی صورت میں انسانی المیہ جنم لے گا

مزیدخبریں