کراچی: سپرہائی وے کی منڈی میں جانوروں کی قلت، قیمتیں آسمان پر پہنچ گئیں

Aug 21, 2018 | 09:52

مویشی منڈی انتظامیہ کے مطابق اس سال ایک لاکھ 92 ہزار جانور مویشی منڈی لائے گئے جن میں سے اب تک تقریباً 20 ہزار سے بھی کم جانور باقی رہ گئے ہیں۔مویشی منڈی میں جانوروں کی کمی کے باعث بیوپاریوں نے قیمتیں بھی بڑھا دی ہیں جس کے باعث شہری مہنگے جانورں کا شکوہ کرتے نظر آرہے ہیں۔بیوپاریوں کا کہنا ہےکہ اس بار جانور کم لائے گئے ہیں، انتظامیہ ہمیں سہولت نہیں دے رہی، چار دن سے مویشی منڈی میں پانی نہیں آرہا۔واضح رہے کہ ملک بھر میں کل عید الاضحیٰ منائی جارہی ہے جس مناسبت سے کراچی میں قربانی کے لیے بڑے پیمانے پر جانور لائے گئے ہیں۔

ضرور پڑھیں: Labb Azaad 22 September 2018

کراچی کی مویشی منڈی میں جہاں چھوٹے جانور موجود ہیں تو وہیں پرقد آور اورخوبصورت جانور بھی توجہ کا مرکز ہیں۔ ان مویشیوں کی قیمتیں بھی کافی زیادہ ہیں جنہیں صرف صاحب حیثیت لوگ ہی خرید کر اللہ کی راہ میں قربان کرتے ہیں،

کراچی میں سہراب گوٹھ منڈی میں چھوٹے جانوروں کے ساتھ ساتھ قد آور، صحتمند اور خوبصورت جانور بھی موجود ہیں۔ جن میں سبی اور آسٹریلین نسل کے جانور توجہ کا مرکز ہیں۔ منڈی میں جانوروں کی خریداری کیلئے آنیوالے افراد کا کہنا ہے کہ یہاں پر چھوٹے بڑے جانور تو ہیں لیکن قیمتیں آسمان پر ہیں۔ خواہش ہے اچھا اور خوبصورت جانور خرید کر اللہ کی راہ میں قربان کریں۔منڈی میں جہاں عام طبقے کے لوگ پریشان ہیں
تو دوسری جانب سبی، دیسی اور آسٹریلیائی نسل کے مویشی کو صاحب حیثیت لوگ لاکھوں روپے میں خرید کر سنت ابراہیمی کی ادائیگی کرتے ہیںمویشی منڈی میں قد آور اور صحت مند جانوروں کی ڈیل ڈول دیکھ کر ہر ایک کا دل للچاتا ہے کہ وہ ایسے جانور خرید کر اللہ کی راہ میں قربان کرے۔ لیکن ان کی جیب اس چیز کی اجازت نہیں دیتی کہ وہ ان جانوروں کو خرید سکیں۔ کیمرہ مین میر ولی کے ساتھ محمد عرفان وقت نیوز کراچی

مزیدخبریں