مقبوضہ بیت المقدس مسجد اقصیٰ سے باہر نکلتے ہوئے 1فلسطینی لڑکی گرفتار

Aug 28, 2018 | 11:49

اسرائیلی پولیس نے مسجد اقصیٰ میں نماز کی ادائیگی کے بعد باہر آنے وا لی 1 فلسطینی لڑکی کو حراست میں لینے کے بعد پولیس مرکز منتقل کر دیا گیا ۔مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق بیت المقدس کی ایک خاتوم معلمہ خدیجہ خویص نے بتایا کہ اس کہ 16 سالہ بیٹی شفا ابو غالیہ کو مسجد اقصیٰ کے باب الحطہ کے مقام سے حراست میں لینے کے بعد پولیس مرکز منتقل کر دیا گیا ۔اسرائیلی پولیس نے کہا کہ حکام نے معلمہ خدیجہ خویص کو بھی طلب کیا ہے۔ اس کی بیٹی کو اس لیے حراست میں لیا گیا کہ وہ مسجد اقصیٰ میں نماز ادا کرنے آئی تھی اور اس کے لیے حکام سے اجازت نہیں لی تھی۔خیال رہے کہ گذشتہ روز اسرائیلی فوج نے بیت المقدس سے 7 فلسطینیوں کو حراست میں لینے کے بعد جیلوں میں ڈال دیا ہے۔ چار فلسطینیوں کی شناخت نہیں ہوسکی۔

 

مزیدخبریں