پاکستان نے ابھی تک آئی ایم ایف کے پاس جانے کا فیصلہ نہیں کیا۔ اگر ہم آئی ایم ایف کی طرف جاتے بھی ہیں تو یہ نئی بات نہیں ہو گی, وزیر خزانہ اسد عمر

Aug 29, 2018 | 00:05

سینیٹ میں اظہار خیال کرتے ہوئے وزیر خزانہ اسد عمر کا کہنا تھا کہ ہاکستان پہلے 12 مرتبہ آئی ایم ایف کے پاس جا چکا ہے ، آئی ایم ایف کے حوالے سے امریکی بیان غیر ضروری اور قبل از وقت تھا، فی الحال ہمارا آئی ایم ایف سے رجوع کرنے کا پروگرام نہیں، اگر ہم آئی ایم ایف کی طرف جاتے ہیں تو یہ نئی بات نہیں ہو گی۔ ہمارے زیادہ تر قرضے چین سے لیے گئے، ایسا کہنا کہ آئی ایم ایف سے پیسہ ، چین کا قرضہ اتارنے کے لیے لیا جا رہا ہے ، حقائق سے برعکس ہے، اسد عمر کا کہنا تھا کہ این ایف سی ایوارڈ کے معاملے کو بد قسمتی سے ماضی میں پارلیمنٹ میں نہیں اٹھایا گیا۔ این ایف سی ایوارڈ میں دو سال کی تاخیر ہو چکی ہے ، سیکریٹری خزانہ کو ہدایت کی ہے کہ وہ این ایف سی ایوارڈ کا عمل جلد شروع کریں۔ شیری رحمان نے صحیح کہا کہ اس وقت ملک کی معیشت لائف لائن پر ہے، ہمارا چین کا قرضہ اب بھی کم ہے، ہم ملکی معاشی صورتحال عوام کے سامنے رکھیں گے ۔

پارلیمنٹ سے مشورہ کریں گے کہ کیا کیا جائے۔

مزیدخبریں