پاکستان اور بھارتی انڈس واٹر کمیشنرز کے مابین دوروزہ مذاکرات نتیجہ خیز نہ ہو سکے،  انڈس واٹر کمیشنر نے مشترکہ اعلامیہ جاری نہ ہونے کی ذمہ داری اعلیٰ حکام پر ڈال دی

Aug 31, 2018 | 01:15

پاکستان اور بھارتی انڈس واٹر کمیشنرز کے مابین دوروزہ مذاکرات نتیجہ خیز نہ ہو سکے ذرائع کے مطابق پاک بھارت آبی تنازعات پر بھارتی ہٹ دھرمی برقرار ہے بھارت نے پاکستانی اعتراضات مسترد کر دئیے پکل ڈل ڈیم اور لوئر کلنئی پر کام جاری رکھنے کاعندیہ بھی دے دیا،، ذرائع کے مطابق مذاکرات میں پاکستانی وفد نے کمزور موقف پیش کیا مذاکرات کی ناکامی کے بعد مشترکہ بریفنگ بھی نہیں دی گئی،، انڈس واٹر کمشنر نے مشترکہ اعلامیہ جاری نہ ہونے کی ذمہ داری اعلی حکام پر ڈال دی،،،ذرائع کے مطابق پاکستانی واٹر کمیشن اس سے پہلے بھی کشن گنگا اور بگلہیار ڈیموں پر کیس ہار چکا ہے ،، جس کی وجہ پاکستانی حکام کا بروقت فورم پر آواز نہ اٹھانا تھا ،اس بار دیگر بھارتی منصوبوں پر آبی جارحیت پر بھی موثر اواز اب تک نہیں اٹھائی گئی،، سندھ طاس معاہدے کی خلاف ورزی بھارت مسلسل کر رہا ہے

مزیدخبریں