شام کے صدر بشارالاسد کی حامی فورسز نے ملک میں باغیوں کے زیرقبضہ آخری بڑے علاقے ادلب کی جانب پیش قدمی شروع کردی

Aug 31, 2018 | 10:46

شامی وزیر خارجہ ولید المعلم نے ماسکو میں روسی ہم منصب سرگئی لاوروف سے ملاقات کی ،جس میں اس بات کا اعلان کیا ہے کہ شامی فورسز کو اس پیش قدمی میں بھی روسی فضائی مدد حاصل ہے،،، شامی وزیر خارجہ ولید المعلم کا کہنا تھا کہ شامی فورسز ادلب میں باغیوں کے زیرقبضہ علاقوں کے اندر تک جائیں گی اوراس معرکے میں شامی فورسز کا اصل ہدف النصرۃ فرنٹ کے عسکریت پسند ہوں گے،،،ادھر روسی وزارت دفاع نے بحیرہ روم میں وسیع تر بحری مشقیں کرنے کا اعلان کیا ہے، وزارت دفاع کے مطابق یکم تا 8 ستمبر جاری رہنے والی ان مشقوں میں 25 بحری جہاز اور 3 جہازوں کی شرکت بھی متوقع ہے۔

مزیدخبریں